ورکرز میموریل ڈے


منصور مہدی
آج ورکرز میموریل ڈے ہے۔ یہ دن ہر سال 28اپریل کو منایا جاتا ہے۔ یہ دن ان افراد کی یاد کا دن ہے کہ جو گھروں سے کام پر جاتے ہیں لیکن پھر واپس نہیں آتے یا دوران کام زخمی ہو کر عمر بھر کے لیے معذور بن جاتے ہیں۔سب سے پہلے یہ دن کینیڈا میں کینیڈین یونین آف پبلک ایمپلائز کے زیر اہتما م 1984کو منایا گیا۔ جبکہ انٹرنیشنل لیبر آرگنائزیشن نے 1995میں اس دن کی منطوری دی جس کے بعداب یہ دن دنیا کے بیشتر ممالک میں منایا جاتا ہے۔آئی ایل او کی رپورٹ کے مطابق دنیا بھر میں ہر 15سیکنڈ میں ایک ورکر اور روزانہ 6000 ورکرز دوران کام ہلاک ہوجاتے ہیں۔جبکہ سالانہ 270ملین ورکر مختلف حادثات کا شکار ہوتے ہیں۔ آئی ایل او کے مطابق یہ اعداد و شمار رجسٹرد واقعات کے مطابق ہیں جبکہ ترقی پذیر اور پس ماندہ ممالک میں اصل تعداد ان سے بہت زیادہ ہے۔ آئی ایل او کا کہنا ہے کہ ہلاک یا زخمی ہونے کے علاوہ ایسے ورکرز کی تعداد کہیں زیادہ ہے جو جائے کام کے غیر صحتمندانہ ماحول کے سبب بیمار ہوجاتے ہیں۔ پاکستان سمیت دنیا کے کئی ممالک میں ایسے ہلاک ہونے یا شدید زخمی ہو کر معذور ہونے والے ورکرز یا ان کے خاندان کی کفالت کا کوئی انتظام نہیں ہوتا ۔ نہ تو وہ ادارے کہ جہاں ورکر کام کے دوران ہلاک یا زخمی ہوا کی کفالت کرتے ہیں اور نہ ہی حکومت کی طرف سے کوئی مناسب اقدامات ہوتے ہیں۔

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s